جنیوا کے کامیاب دورے کے بعد علی رضا سید کی قیادت میں کشمیر کونسل ای یو کا وفد واپس برسلز پہنچ گیا

Ali Raza Syed

Ali Raza Syed

اوسلو (پ۔ر) کشمیر کونسل یورپ کے چیئرمین علی رضا سید کی قیادت میں کونسل کا ایک تین رکنی وفد جنیوا کے کامیاب دورے کے بعد واپس برسلز پہنچ گیاہے۔

جنیوامیں دوروزہ قیام کے دوران وفد نے اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے اجلاس کے دوران کشمیری کمیونٹی کی طرف سے منعقد ہونے والے بھارت مظالم کے خلاف مظاہرے اور کشمیرپر منعقدہونے والی نمائش میں شرکت کی۔ وفدمیں کونسل کے سینئرعہدیدار چوہدری خالد محمود جوشی اور سردارصدیق بھی شامل تھے۔

وفد نے مقبوضہ کشمیرسے جنیواکے دورے پر آئے ہوئے انسانی حقوق کے کشمیری علمبردار پرویزامروز سے بھی ملاقات کی ۔ملاقات کے دوران مقبوضہ کشمیرکی تازہ ترین حالات خصوصاً بھارتی ریاستی دہشت گردی اور انسانی حقوق کی صورتحال پر تبادلہ خیال کیاگیا۔

اس موقع پر مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کے حوالے سے سرگرم رہنماء خرم پرویز کی گرفتاری پر تشویش ظاہرکی گئی۔ واضح رہے کہ خرم پرویز نے اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کونسل کے اجلاس کے حوالے سے نہ صرف جنیواآنا تھابلکہ بلجیم کے دارالحکومت برسلزمیں کشمیرکونسل ای یو کے زیراہتمام ’’حق خودارادیت کشمیرکی جدوجہدمیں خواتین کے کردار‘‘ کے حوالے سے ایک کانفرنس میں سے بھی خطاب کرناتھالیکن بھارتی حکام نے انہیں دہلی ائرپورٹ پر گرفتارکرکے کالے قانون کے تحت جیل میں ڈال دیا۔

کشمیرکونسل ای یو کے وفد نے خرم پرویزکی گرفتاری پر سخت تشویش کااظہارکیااورمقبوضہ کشمیرکے عوام کے ساتھ گہری ہمدردی کا اظہارکیا۔

پرویزامروزنے بھی برسلزمیں کشمیرکونسل ای یو کے زیراہتمام ’’حق خودارادیت کشمیرکی جدوجہدمیں خواتین کے کردار‘‘ کے حوالے سے کانفرنس میں شرکت کرناتھی لیکن وہ مقبوضہ کشمیرکے گھمبیرحالات خصوصاً خرم پرویز کی گرفتاری کے بعد پیداہونے والی صورتحال کے باعث جنیواسے واپس مقبوضہ کشمیرجانے پر مجبورہوگئے۔

علی رضاسیدنے پرویزامروزکو یقین دلایاکہ کشمیرکونسل ای یو مسئلہ کشمیرخصوصاً مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق کے مسائل کو یورپ میں اجاگرکرتی رہے گی تاکہ اس حوالے سے بھارت پر عالمی دباؤ بڑھاجاسکے۔

انھوں کہاکہ ہم خرم پرویز کی گرفتاری اور انہیں یورپ آنے روکنے کا مسئلہ بھی انسانی حقوق کے اداروں کے سامنے اٹھائیں گے۔

Ali Raza Syed

Ali Raza Syed

Ali Raza Syed

Ali Raza Syed