سانحہ نکیال میں ہلاکت پر دلی افسوس ہے۔ عمران رشید چوھدری

PTI Paris

PTI Paris

پیرس (میاں عرفان صدیق) 18فروری 2016ء کشمیر تحریک انصاف فرانس کے سینئر رہنماء عمران رشید چوھدری نے کہا ہے کہ کچھ دن پہلے سانحہ نکیال میں ہلاکت پر دلی افسوس ہے اور قاتلوں کو یقینی طور پر سزا ملنی چاہیے تاہم اسے سیاسی رنگ دے کر کیس کو خراب نہیں کرنا چاہیے۔

یہ کتنا افسوسناک مرحلہ ہے کہ ہمارا آزادکشمیر کا وزیراعظم خود اپنے خلاف یوم سیاہ منا رہا ہے جس طرح وزیر امور کشمیر برجیس طاہر نے کچھ دن پہلے ایک ٹی وی چینل پر ایک پروگرام میں یہ انکشاف کیا ہے کہ وزیراعظم مجید جب نواز شریف اور وزیر امور کشمیر کو ملتا ہےتو رونا شروع کردیتا تھا۔ یہ ہماری قومی تزلیل ہے اور پوری کشمیری قوم کو شرمندہ کیا گیا ہے۔

ہمارا وزیراعظم چوھدری مجید ریاستی تشخص کیلئے کلنک کا ٹیکہ ہےاور برجیس طاہر کے منہ سے یہ باتیں سن کر کشمیریوں کے سر شرم سے جھک گئے ہیں ایک طرف بھٹو نے مُوت کو گلے لگا کر آمر کےآگے نہیں جھکے آج ان کی روح بھی تڑپ رہی ہو گئی کہ ان کا جانشین اپنے آقاؤں کے آگئے بھیگی بلی بن کر تلوے چاٹ رہا ہے کرسیی بچانے کیلئےپانچ سال بھیک مانگ کر کریسی بچائے رکھی وزیر امور کشمیر برجیس طاہر اور وزیر اعظم مجید نے قومی و ریاستی تشخص کی پامالی کر رہے ہیں۔

جبکہ دوسری طرف قائد کشمیر بیرسٹر سلطان محمود چوھدری جو دن رات ایک کر کے محنت ولگن جدجہد سے انٹرنیشنل سطح پر ڈیرھ کڑوڑ کشمیری قوم کی ترجمانی کر کے مسلہ کشمیر کوئی ہائی لائٹ کررہے ہیں بھارتی تسلط کے خلاف اقوام عالم کی توجہ دلانے کی کوشش عمل میں ہیں جنھوں نے گزشتہ سال سے ملین مارچ کر کے یورپ و یوناہیٹڈ سٹیٹ ڈپارٹمنٹ کو بیدار کیا ہے کہ جب تک کشمیر کامسلہ حل نہ ہو گا جنوبی ایشیاء میں امن قائم نہیں رہ سکتا۔

جبکہ آزاد کشمیر کی عوام آئندہ انتخابات میں ووٹ کا استعمال کر کے قومی و ریاستی تشخص کا بدلہ لیں گئے اور یقینناً قائد کشمیر بیرسٹر سلطان محمود جیسے ایماندار اور کشمیریوں کی صیح معنوں میں ترجمانی کرنے والے لیڈر کو کامیاب بنا کر قوم و ملک دشمن عناصر کو زمین بُوس کر دیں گئے۔