اوسلو: احتساب کے لیے عمران خان کا مطالبہ جائز ہے لیکن توڑ پھوڑ نہیں ہونی چاہیے، راجہ منصور احمد

Raja Mansoor Ahmad

Raja Mansoor Ahmad

اوسلو (پ۔ر) پاکستان اوورسیزالائنس کے چیئرمین راجہ منصور احمد نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کا مطالبہ درست ہے کہ وزیراعظم نواز شریف سمیت تمام سیاستدانوں کا احتساب کیا جائے۔

کسی بھی ملک کی درست سمت ترقی کے لیے احتساب بہت ضروری ہے اور پاکستان جیسے ملک میں تو کڑااحتساب ہونا چاہیے۔

پاکستان میں قدم قدم پر بدعنوانی اور رشوت ستانی ہے۔ اگراحتساب میں مزید دیرکی گئی تو بدعنوانی کا ناسور ملک و قوم کو تباہ کردیگا۔ملک کو بچانے اور سنوارنے کے لیے محاسبہ اشد ضروری ہے۔ یہ وقت ہے کہ حکومت اپنے آپ کو رضاکارانہ طورپر احتساب کے لیے پیش کرے۔

اگر حکومت اس میں پہل کرے گی تو قوم کا ہرفرد اپنے آپ کو احتساب کے لئے پیش کردے گا۔ اوپر سے نیچے تک احتساب ہونا چاہیے۔ عمران خان کی قابلیت کے بارے میں راجہ منصور نے کہاکہ عمران خان ظاہراً سیدھا ساداآدمی لگتاہے اور ایسے لوگ کم ہی ہیرپھیر جانتے ہیں۔

انہیں بھی ایک دفعہ موقع ملناچاہیے تاکہ وہ پاکستان کی سیاست کی بلندترین سطح پر اپنا کرداراداکرسکیں۔ پاکستان میں گرفتاریوں اورتوڑپھوڑ کے بارے میں راجہ منصوراحمدنے کہاکہ ایسے اقدامات نہیں ہونے چاہیے جس سے کاروبار زندگی رک جائے اور نجی اور سرکاری املاک کو نقصان کا اندیشہ ہو۔

احتجاج کرنا جمہوری حق ہے لیکن احتجاج کے بہانے عام زندگی کو متاثرنہ کیاجائے اور حکومت بھی ہوش کے ناخن لے کر لوگوں کو انکا جمہوری حق استعمال کرنے دے۔گرفتاریوں سے مسائل حل نہیں ہوں گے ۔ قوانین پر عمل کیاجائے تو تمام مسائل حل ہوسکتے ہیں۔ قوانین موجودہیں لیکن عمل درآمد نہیں ہوتا۔پاکستان میں تو قانون دان، قانون ساز اور قانون نافذ کرنے والے ہی قانون پر عمل نہیں کرتے تو وہاں کے عام آدمی سے کیاشکوہ کیا جا سکتا ہے۔