رمضان المبارک، شب قدر کی عظمت، سید علی گیلانی

Ali Gilani

Ali Gilani

سوئیٹزرلینڈ : رمضان کے لفظ میں پانچ حروف ہیں اور ہر حرف کی بڑی اہمیت ہے ، “ر ” سے مراد پروردیگار کی رضامندی، حرف “م” خدا کی محبت، “ض” سے مراد خدا اپنے بندوں کا ضامن ہے، اور “ا” سے مراد خد کی الفت اور “ن” سے مراد خدا کا نور ہے۔ رمضان المبارک کی جب پہلی رات آتی ہے خدا جبریل کو حکم دیتا ہے کہ آقا صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی امت کیلئے جنت کے دروازے کھول دو اور دوزخ کے دروازے بند کر دو اور جب ماہ رمضان المبارک میں جمعہ کی رات آتی ہے یا دن آتا ہے تو اس دن رات کی ہرایک لمحہ میں خدا ایسے ہزاروں گنہگاروں کو بخش دیتا ہے جو دوزحخ کی آگ کے مستحق ہوتے ہیں، یہ وہ مہینہ ہے جس کا اول حصہ رحمت درمیانی حصہ مغفرت اور آخری حصہ جہنم سے آزادی کا ہے۔

ایہہ ہے ماہ رمضان دا اللہ دے احسان دا
لٹ لے رب دیاں رحمتاں مسلم ایس مہینے وچ
اس مہینہ میں ایک ایسی رات جس کو شب قدر کہتے ہیں ہزاروں مہینے کے عمل سے بہتر ہیں، اس رات شام سے صبح تک اللہ کی ذات اپنے بندوں پر توجہ کرتی ہے اسی رات قرآن شریف نازل ہوا ۔ آقا صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا جس شخص نے شب قدر میں تین مرتبہ کلمہ طیبہ پڑھا تو خدا اس کو معاف کر دے گا اور جنت میں داخل کرے گا۔

شب قر کے نوافل: 1 چار رکعت نفل ہر رکعت میںسورہ فاتحہ، سورہ تکاثرایک مرتبہ اور سورہ اخلاص تین مرتبہ تو موت کی سختیوں سے آسانی ہو گی اور عذاب قبر سے محفوظ رہے گا ۔ 2 چار رکعت نفل ہر رکعت میں سورہ فاتحہ کے بعد سورہ قدر ایک مرتبہ اور سورہ اخلاص ستائیس مرتبہ پڑھے تو انسان ایسے گناہوں سے پا ک ہو جاتا ہے جیسے آج پیدا ہوا ہو۔ 3 چار رکعت نفل سورہ فاتحہ کے بعد تین مرتبہ سورہ قدر اور سورہ اخلاص پچاس مرتبہ پھر سجدہ میں جا کر ایک دفعہ تیسرا کلمہ کا پہلا حصہ واللہ اکبر تک پڑھیں جو بھی دعا منگے گا قبول ہو گی اور تمام گناہ معاف ہو جائیں گے۔