بھمبر کی خبریں 4/4/2016

Latcure

Latcure

مصطفی آباد/للیانی (نامہ نگار) بیدیاں میں مہنگے داموں و ناقص اشیاء فروخت کرنے والے 8 افراد گرفتار، اے سی قصور شاہ رخ نیازی نے عوامی شکایات پر چھاپے مار پر ملزمان کو حوالات میں بند کروا دیا، الگ الگ مقدمات درج، تفصیلات کے مطابق اے سی قصور محمد شاہ رخ نیازی نے پولیس کے ہمراہ نواحی گائوں بیدیاں میں کریانہ سٹور، ہوٹلوں اور مرغی کا گوشت فروخت کرنے والی دوکانوں پر چھاپے مارے، مذکورہ دوکانداروں نے ریٹ لسٹ آویزاں نہ کی تھی اورناقص اشیا مہنگے داموں فروخت کر رہے تھے، دوہوٹلوں سے شبیر احمد میئو، نوید ملک، محمد وسیم میئو، امجد علی انصاری، کریانہ سٹوروں سے راشد علی ، اللہ رکھا اور مرغی کا گوشت فروخت کرنے والے محمد دائود میئواورمحمد گلزارمیئو کو گرفتار کرکے ان کے خلاف پرائس کنٹرول ایکٹ اور 272/273کی دفعات کے تحت الگ الگ مقدمات درج کرکے ملزمان کو حوالات میں بند کر دیا۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

مصطفی آباد/للیانی(نامہ نگار) صابر شہید پٹرولنگ پولیس نئے جذبہ ولگن کے ساتھ خلقِ خدا کی راہنمائی و امدادکرے گی، پٹرولنگ پولیس ضلع قصور کے تمام سٹاف کو ایلیٹ کمانڈوز اور اسلحہ ماہرین کی زیر نگرانی اسلحہ استعمال کرنے ,اسلحہ کی حفاظت ،اسلحہ SOPکے بارہ میں تفصیلی لیکچر و عملی پریکٹس کردی گئی ہے، ان خیالات کا اظہار ڈی ایس پی پٹرولنگ پولیس محمد شعیب چیمہ نے صابر شہید پٹرولنگ چیک پوسٹ پر پریس کلب مصطفی آباد للیانی(رجسٹرڈ) کے صحافیوںکو بریفنگ دیتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ فوجی افسران کی زیر نگرانی پٹرولنگ پولیس کے تمام افسران و ملازمین نے جدید ہتھیار چلانے کی ٹریننگ مکمل کر لی ہے،،ریسکیو1122کے تعاون سے فرسٹ ایڈ کے بارہ میں تفصیلی لیکچر اور عملی مظاہر ہ کیاگیا،اسی طرح سول ڈیفینس اتھارٹیز کے ماہرین نے بم ناکارہ بنانے ۔آگ لگنے،سیلاب کی صورتحال ودیگر آفات و حادثات سے نپٹنے کے بارہ میں تفصیلی لیکچر دیا،مزید برآں دہشت گردی کے واقعات سے نبرد آزما ہونے کے بارہ میں مفید معلومات مہیا کی گئیں،DSPشعیب چیمہ نے مزید بتایا کہ سول ڈیفینس ،ریسکیو1122،ایلیٹ فورس ،اسلحہ ماہرین ،عسکری ماہرین کے تعاون سے پٹرولنگ پولیس کے افسران و ماتحتان کا قوتِ کار،اعتماد اور افادیت میں بے پناہ اضافہ ہوا ہے،اب پٹرولنگ پولیس نئے جذبہ ولگن کے ساتھ ان ہدایات و معلومات کو عملی زندگی میں لاگو کرکے خلقِ خدا کی راہنمائی و امداد کو بہترین اور مزید موثر و متحرک کرنے کے سلسلہ میں اپنا کردار ادا کریگی،عوام الناس کسی بھی وقت حادثہ،واردات،امداد یا راہنمائی کے لیے پٹرولنگ پولیس کی امداد،راہنمائی حاصل کرنے کے لیے 1124پر کال کر کے پٹرولنگ پولیس کی خدمات سے استفادہ حاصل کرسکتے ہیں۔صحافیوں کے سوالوں کے جوابات دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پٹرولنگ پولیس میں کسی کرپٹ اہلکار کی جگہ نہیں، کرپٹ اہلکار کریشن چھوڑ دیں یا ڈیوٹی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Mubeen Mahmood

Mubeen Mahmood

مصطفی آباد/للیانی(نامہ نگار) مقامی صحافی کے بیٹے نے پانچویں کلاس تک پوزیشن بر قررار رکھنے کا ریکارڈ قائم کر دیا، مبین محمود نے پانچویں کلاس میں 500میں سے 400نمبر حاصل کرکے دسری پوزیشن حاصل کر لی، صحافیوں کی مبارکباد،تفصیلات کے مطابق فوٹو جرنلسٹ مصطفی آباد کے سنیئر نائب صدر محمد بوٹا ساگر کے بیٹے مبین محمود نے نجی سکول میں پانچویں کلاس میں 500میں سے 400نمبر حاصل کرکے دوسری پوزیشن حاصل کر لی مبین محمود گزشتہ پانچ سال سے ہر کلاس میں کوئی نہ کوئی پوزیشن حاصل کر رہا ہے، صدر پریس کلب مصطفی آباد محمد عمران سلفی ودیگر صحافیوں نے دوسری پوزیشن حاصل کرنے پر مبین محمود کو مبارکباد دی۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

مصطفی آباد/للیانی(نامہ نگار)ڈسٹرکٹ قصور میں BHUsْ24/7کے شعبہ میں 36ویں میں سے 16ویں نمبر پر آ گیا، انچارج ڈاکٹر ثمرہ خرم نے چار ماہ قبل چارج سنبھال کر ڈسٹرکٹ قصور کو ریڈ زون سے نکال دیا، مزید بہتری کا عزم، تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ کواڈینیٹر IRMNCHوانچارج BHUsبیسک ہیلتھ یونٹ 24/7ڈاکٹر ثمرہ خرم نے چار ماہ قصور ڈسٹرکٹ قصور کا چارج سنبھال کر کام شروع کیا تو ڈسٹرکٹ قصور 36ویں نمبر پر تک تھا، ڈاکٹر ثمرہ خرم کے چارج سنبھالنے سے قبل رورل ہیلتھ سنٹروں اور BHUsمیں ڈلیوریاں ایک بجے تک کی جاتی تھی، ان کے چارج سنبھالنے کے بعد چوبیس گھنٹے تک کر دی گئی، اور آگاہی مہم شروع کرکے گھر گھر جا کر عوام کو عطائیوںاور دائیوں سے بچانے کی مہم چلائی گئی، تمام ہسپتالوں میں 24گھنٹے فری سہولت مہیا کر دی گئی جہاں پر تمام ادویات بھی فری دی جا رہی ہیں، ڈاکٹر ثمرہ خرم نے کہا کہ پنجاب حکومت ماں اور بچے کو محفوظ بنانے کیلئے ہر ممکن اقدامات کر رہی ہے، تمام ہسپتالوں میں ملازمین کی حاضری کو یقینی بنایا جا رہا ہے، یو پی ایس تک ٹھیک کروا دئیے گئے ہیں تاکہ عملہ اور مریضوں کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے، ڈسٹرکٹ کواڈینیٹر IRMNPHوانچارج BHUs 24/7ڈاکٹر ثمرہ خرم نے کہا کہ ڈی سی او قصور سلمان غنی اور ای ڈی او ہیلتھ ڈاکٹر طارق مسعود کے تعاون سے ڈسٹرکٹ قصور کو پہلے دس نمبروں میں لانا میرا مشن ہے، وزیر اعلی پنجاب میاں محمد شہباز شریف نے عوام کو بنیادی سہولیات کی فراہمی کا تہیہ کر رکھا ہے، جن کے احکامات کی روشنی میں رورل ہیلتھ سنٹروںاور بنیادی صحت کے مراکز میں نارمل ڈلیوری مکمل فری ہے اور تمام ادویات بھی مہیا کر دی گئی ہے، پہلے عوام کو معلوم ہی نہ تھا کہ ہسپتالوں میں کیا کیا سہولیات مہیا کر دی گئی ہے، اب لیڈی ہیلتھ ورکرز کے ذریعہ، پمفلٹ ودیگر ذرائع کے ذریعے عوام کو آگاہ کیا جا رہا ہے، جس کے بعد عوام کا رجحان سرکاری ہسپتالوں کی طرف ہو گیا ہے، سرکاری ہسپتالوں میں کوالیفائڈ ڈاکٹراور عملہ عوام کے علاج معالجہ میں مصروف ہے جبکہ پرائیوٹ ہسپتالوں میں اکثریت عطائیوں کی ہے، ڈاکٹر کا نام تو صرف باہر لگائے بورڈ پر ہی ہوتاہے، ڈاکٹر ثمرہ خرم نے عوام سے بھی اپیل کی کہ وہ عطائیوں کے پاس جانے کی بجائے سرکاری ہسپتالوں کا رخ کریں اور خادم اعلی کے اقدامات سے مستفید ہوں، گزشتہ ایک ماہ کے دوران BHUمیں 1052جبکہ رورل ہیلتھ سنٹروں میں 788ڈلیوریاں کی گئی ہیں،
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Protest

Protest

مصطفی آباد/للیانی(نامہ نگار) رورل ہیلتھ سنٹر مصطفی آبادمیں ڈاکٹر غائب، سٹاف نرس مریضوں کو چیک کرنے میں مصروف،شہری سراپہ احتجاج، اعلی حکام سے فوری نوٹس لینے کا مطالبہ، جب ڈاکٹر کی ضرورت ہوتی ہے بلا لیتے ہیں،سٹاف نرس کا موقف، تفصیلات کے مطابق رورل ہیلتھ سنٹر مصطفی آباد سے ڈاکٹر غائب، مصطفی آباد اور اس کے نواحی دیہات سے آئے مریض خوار ہونے لگے، معمولی زخمی مریضوں کو بھی ریفر کر دیا جاتا ہے، ڈاکٹر ظفر نے کہا کہ ہمارا جھگڑا ہوا تھا جس میں ہمارا مریض عبدالمجید زخمی وہ گیا تھا جسے صبح سے لیکر آئے ہوئے ہیں ڈاکٹر ڈیوٹی پر نہ ہونے کی وجہ سے نہ تو ایم ایل سی دیا جا رہا ہے اور نہ ہی ریفر کر رہے ہیں، حافظ محمد نعیم نے کہا کہ ہم گزشتہ رات کو آئے تھے ڈاکٹر ڈیوٹی سے غائب تھا سٹاف نے کہا کہ صبح آنا اور اب صبح سے ہی ڈاکٹر ڈیوٹی پر موجود نہ ہے، جس کہ وجہ سے نہ تو ایم ایل سی دیا گیا ہے اور نہ ہی ریفر کیا گیا ہے، صبح سے خوار ہو رہے ہیں، ہفتہ کی صبح کرنل لیاقت گل کے ڈرائیور شہباز کو شدید زخمی حالت میں ہسپتال لایا گیا جہاں پر کوئی بھی ڈاکٹر ڈیوٹی پر موجود نہ تھا جبکہ لاہور لیجانے کیلئے ایمبولنس بھی مہیا نہ کی گئی، جس کی وجہ سے خون زیادہ بہہ جانے کی وجہ سے مریض کی حالت مزید خراب ہو گئی، سیاسی و سماجی جماعتوں کے نمائندوں اور عوامی حلقوں نے اعلی حکام سے فوری نوٹس لیتے ہوئے ہسپتال کو ویرانے کی طرف لیجانے والے نا اہل و غفلت کے مرتکب ڈاکٹروں کے خلاف کاروائی اور محنتی و ایماندار ڈاکٹروں کو تعینات کرنے کا مطالبہ کیا ہے جو کہ مریضوں کی مسیحائی کر سکے، سٹاف نرس نے کہا کہ کوئی بھی مریض زیادہ سیریس نہ تھا جس کی وجہ سے ڈاکٹر کو نہیں بلایا گیا ہم جب بھی ڈاکٹر کی ضرورت محسوس کرتے ہیں بلا لیتے ہیں صبح سے اب تک 12مریضوں کو چیک کیا گیا کوئی بھی سیریس مریض نہ تھا جس کی وجہ سے ڈاکٹر کو نہیں بلایا گیا۔

محمد عمران سلفی صدر پریس کلب مصطفی آباد للیانی رجسٹرڈ
0300-0334-7575126