تلنگانہ یوم تاسیس کے موقع پر گری راج کالج میں سمینار

Telangana Seminar

Telangana Seminar

نظام آباد (اسلم فاروقی) خوابوں کی ریاست تلنگانہ اپنے قیام کے دوسال مکمل کرچکی ہے۔ اس ریاست کا علاقہ ماضی میں بھی سنہرا تھا تاہم دیگر علاقوں کے اقوام کی نا انصافیوں سے علاقے کی ترقی رک گئی تھی۔ بے شمار نوجوانوں کی قربانیوں اور طویل جدوجہد کے بعد یہ ریاست ہمیں حاصل ہوئی ہے اور اس ریاست کو سنہری ریاست بنانے میں عوام اور حکومت کا م کر رہے ہیں۔

تعلیمی شعبہ میں ریاست کو سنہرا بنانے کے لئے طلبا و اساتذہ کو اہم کردار ادا کرنا ہوگا۔ ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر راجندر پرساد پرنسپل گری راج گورنمنٹ کالج نظام آباد نے ریاست تلنگانہ کے دوسرے یوم تاسیس کے موقع پر حکومت کی جانب سے دئے گئے موضوع ” تلنگانہ ریاست کو سنہرا کیسے بنائیں؟ پر منعقدہ سمینار سے خطاب کر رہے تھے۔

کالج میں ترنگا لہرانے کے بعد منعقدہ اس پروگرام سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت اختراعی پروگراموں جیسے مشن کاکتیہ’مشن بھاگیرتا’شادی مبارک’ اقلیتوں کے لئے اعلیٰ تعلیم کی اسکالرشپ’ہریتا ہرم اور دیگر عوام دوست پروگرام منعقد کرتے ہوئے ریاست کو ترقی کی سمت لی جارہی ہے اس بات کا ثبوت حالیہ رپورٹ ہے جس میں وزیر اعلی کے سی آرکو ملک کا مقبول ترین چیف منسٹر قرار دیا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ تلنگانہ میں تعلیمی انقلاب لانے کی ضرورت ہے۔ گری راج کالج تلنگانہ کا سرفہرست کالج ہے۔ جس میں ٢١ یوجی اور ٩ پی جی کورسز پڑھائے جاتے ہیں۔ اس سال سے ریاست میں پہلی مرتبہ کسی کالج میں جیالوجی اور لائبریری سائنس کورسز کا ڈگری کی سطح پر آغاز ہورہا ہے۔ باٹنی میں ایم سے شروع ہورہا ہے۔

کالج میں سی بی سی ایس نظام تیسرے سال میں داخل ہورہا ہے۔ انہوں نے طلبا و اساتذہ پر زور دیا کہ طلبا کالج میں معیاری تعلیم کا ماحول ہو اور طلبا علمی اور فنی مہارتوں کے ساتھ ملک و قوم کی خدمت کے لائق بنیں۔ انہوں نے کہا کہ اس سال سے تمام ڈگری کالجوں کے داخلےDOSTویب سائٹ پر آن لائن درخواستوں کے ذریعے ہی ہونگے۔ ڈاکٹر محمد اسلم فاروقی صدر شعبہ اردو نے اپنی تقریر میں کہا کہ تلنگانہ ریاست میں اقلیتی طلبا کو بیرون ملک اعلی تعلیم کے لئے حکومت کی جانب سے دس لاکھ روپے کی اسکالرشپ دی جارہی ہے۔

طلبا اس سہولت سے استفادہ اٹھائیں۔اقلیتی طلبا کے لئے گروپ امتحانات کی علٰحیدہ سے مفت کوچنگ کا انتظام ہے۔ اس سال سے شروع ہونے والے اقلیتی اقامتی مدارس حکومت کا اچھا اقدام ہے۔ انہوں نے کہا کہ گری راج کالج میں اردو میڈیم بی اے اور بی کام کورسز میں طلبا زیادہ سے زیادہ تعداد میں داخلہ لیں۔وینو پرساد لیکچرر نے کہا کہ سنہرے تلنگانہ کی ایک مثال یہ ہے کہ ریاست میں بلا وقفہ برقی سربراہ کی جارہی ہے اور قحط زدہ علاقوں میں پینے کا پانی سربراہ کیا جارہا ہے۔

آئی ٹی شعبہ میں ریاست ترقی کررہی ہے۔ تعلیم کے میدان میں لڑکوں کے ساتھ لڑکیوں کو بھی آگے آنے کی ضرورت ہے۔ سمینار سے ڈاکٹر محمد عبدالرفیق یوجی سی کو آرڈینیٹر’محمد عابد علی اکیڈیمک کوآرڈینیٹر’ کے دبا راجم’ وینوگوپال سوامی’راکیش چندرا اور دیگر نے خطاب کیا۔ اس سمینار میں کالج کے اساتذہ’ غیر تدریسی عملہ اور طلبا و طالبات نے شرکت کی۔

Telangana Seminar

Telangana Seminar