سانحہ کارساز کے شہدا کی یاد میں ریلی نے پیپلز پارٹی ختم کرنے والوں کو پیغام دے دیا کہ بھٹو دوبارہ میدان میں آ گیا ہے، کامران یوسف گھمن

Kamran Yousuf Ghuman

Kamran Yousuf Ghuman

پیرس (نمائندہ خصوصی) محترمہ بے نظیر بھٹو کی بحالی جمہوریت کیلئے وطن واپسی پر کراچی میں ہونے والے سانحہ کارساز اور اس کے نتیجہ میں شہید ہونے والے کارکنان کی یاد میں ریلی نے ان تمام لوگوں کا منہ بند کر دیا ہے جو یہ کہتے نہیں تھکتے تھے کہ پیپلزپارٹی اب پاکستان میں ختم ہو گئی ہے۔

ان خیالات کا اظہار سابق کوارڈینیٹر پیپلزپارٹی یورپ چوہدری کامران یوسف گھمن نے ٹیلی فون پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ ہم یورپ میں مقیم پاکستان پیپلزپارٹی کے جیالے سانحہ کارساز کے شہدا کو سلام پیش کرتے ہیں جنہوں نے اپنی جانوں کا نزرانہ پیش کر کے بحالی جمہوریت اور بی بی شہید کے مشن کو آگے بڑھانے میں اہم کردار ادا کیا۔

انہوں نے کہا کہ آج کی ریلی کو دیکھ کر شہید ذوالفقار علی بھٹو کی جوانی یاد آ گئی اور ان کا نواسہ بلاول زرداری بھٹو اپنے نانا کی تصیر نظر آئے ان کا ملک پاکستان کیلئے قربانیوں کا تذکرہ اور اپنی والدہ کے ذکر پر آبدیدہ ہو جانا فطری عمل تھا اور دوسری جانب وطن سے لازوال محبت کا ثبوت بھی ہے۔

چوہدری کامران یوسف گھمن نے کہا کہ ہم نے یورپ میں رہتے ہوئے پیپلز پارٹی میں عملی کردار ادا کیا ہے اور اپنے علاقہ سے اپنے جیالوں کو اس ریلی میں بھیجا اور اپنے بینرز کے ذریعے اپنی نمائندگی کی اور بلاول زرداری بھٹو کو اپنی وفاداری کا یقین دلایا۔

انہوں نے کہا کہ آنے والا وقت پیپلز پارٹی کا ہے پاکستان کی ترقی پیپلز پارٹی کے ساتھ ہے انہوں نے شیر اور بلے پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ کرپشن اور دھرنوں کی سیاست ختم ہو نے والی ہے اور عوامی راج شروع ہو گا جس میں تمام پاکستانیوں کو حقوق ملیں گے انہوں نے کہا کہ نوجوان بلاول زرداری بھٹو اپنی والدہ اور نانا کے ادھورے خوابوں کو پورا کرے گا، انشاء اللہ۔